ننکانہ ضلعی انتظامیہ کی غفلت عوام نے کورونا وائرس کے پیش نظر احتیاطی تدابیر اور ایس او پیز کی دھجیاں اڑا دیں

ننکانہ صاحب(کاروانِ عدل نیوز/شاہ زیب گجر )ماہ رمضان المبارک میں ضلعی انتظامیہ کی غفلت اور لاپرواہی کے باعث عوام نے کورونا وائرس کے پیش نظر احتیاطی تدابیر اور ایس او پیز کی دھجیاں اڑا دیں، دوکانوں پر عوام کا رش جبکہ دوکانداروں نے اپنی دوکانوں کی بجائے گھروں اور گلی محلوں میں کپڑے رکھ کر فروخت کرنا شروع کردئیے۔ تفصیلات کے مطابق پنجاب حکومت کی طرف سے کورونا وائرس سے بچاﺅ کے لئے خصوصی اقدامات کرنے کی ہدایت کی گئی تھی مگر اس کے برعکس ننکانہ صاحب کی سبزی و فروٹ اور کریانہ سمیت دیگر دوکانوں پر عوام کو بے ہنگم رش دکھائی دے رہا ہے بہت سے دوکانداروں کی طرف سے حکومت کی طرف سے جاری کردہ ایس او پیز کو بھی مکمل طور پر نظر انداز کردیا گیا ہے علاوہ ازیںکلاتھ مرچنٹس کی طرف سے کاہگوں کو اپنے دوکانوں کے اندر داخل کرکے باہر سے شٹر بند کردیا جاتا اورجب کاہگ خریداری مکمل کر لیتا تو اسے شٹر کھول کر باہر نکال دیا جاتا ہے اب پولیس کی طرف سے سختی کے باعث دوکانداروں نے اپنی دوکانوں میں کپڑا وغیرہ فروخت کرنے کی بجائے گلی محلوں اور گھروں میں فروخت کا سلسلہ شروع کردیا گیا ہے جہاں پر عوام کو بہت زیادہ رش دکھائی دے رہا ہے جس سے کورونا وائرس پھیلنے کا اندیشہ ہے شہری حلقوں کی طرف سے ڈپٹی کمشنر ننکانہ صاحب راجہ منصوراحمدسے اصلاح و احوال کا مطالبہ کیا گیا ہے۔

Please follow and like us:
0

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Social media & sharing icons powered by UltimatelySocial