ننکانہ بیرون ضلع گندم کی منتقلی آپریشن کے دوران ابتک 1366ٹن گندم سرکاری تحویل میں لی گئی

ننکانہ صاحب( کاروانِ عدل نیوز)ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر (ریونیو) محمد عثمان خالد نے کہا ہے کہ دوسرے اضلاع میں گندم کی منتقلی کرنے والوں کے خلاف جاری آپریشن کے دوران ابتک 1366ٹن گندم سرکاری تحویل میں لی گئی ہے جبکہ 03افرادکے خلاف متعلقہ تھانوں میں مقدمات درج کروائے گئے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز جاری پریس ریلیز کے دوران کیا انہوں نے کہا کہ وزیر اعلی پنجاب سردار عثمان بزدار کی واضح ہدایت پر عمل درآمد کرتے ہوئے دوسرے اضلاع میں گندم کی منتقلی روکنے کے لیے ضلع بھر کی شاہراوں پر ناکہ جات لگائے گئے ہیں اور گندم دخیرہ کرنے والوں پر کڑی نظر رکھی جا رہی ہے،گذشتہ روز غیر قانونی طور پر دوسرے اضلاع میں منتقل ہونے والی 42ٹن گندم کو ضلعی انتظامیہ نے اپنی تحویل میں لے کر گندم خریداری مراکز پر ان لوڈ کروا دی گی ہے جبکہ اب تک کل 1366ٹن گندم سرکاری تحویل میں لی گئی ہے انہوں نے کہا کہ غیر قانونی طور پر ضلع سے باہر گندم لیجانے والوں کے خلاف ایکشن لیتے ہوئے اب تک 03ایف آئی آر درج ہو چکی ہیں جبکہ 19گاڑیوں کو بھی تھانوں میں بند کیا گیا ہے۔اے ڈی سی آر محمدعثمان خالدنے کہا کہ گندم کی ذخیرہ اندوزی کرنا اوغیر قانونی طور پر دوسرے اضلاع میں منتقل کرنا سنگین جرم ہے ضلع بھر کے داخلی اور خارجی راستوں پر گندم کی سمگلنگ روکنے کے لیے ناکہ جات لگائے گئے ہیں۔انہوں نے مزید کہا کہ ضلع ننکانہ صاحب کی عوام کے لیے ایک لاکھ پانچ ہزار میٹرک ٹن کی خریداری کے ٹارگٹ کو ہر لحاظ سے مکمل کیا جائے گا۔

Please follow and like us:
0

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Social media & sharing icons powered by UltimatelySocial