شاہکوٹ سمیت ضلع بھر میں انتظامیہ سے اجازت لیے بغیر دوسرے اضلاع میں منتقل کی جانے والی گندم ضبط


شاہکوٹ( کاروانِ عدل نیوز)ضلعی انتظامیہ کا حکومت پابندی کے باوجود دوسرے اضلاع میں گندم کی منتقلی کرنے والوں کے خلاف کاروائیوں کا سلسلہ جاری ، متعدد ٹرک اور ٹرالیوں کو پکڑکر مقدمات درج کروادئیے۔ تفصیلات کے مطابق ڈپٹی کمشنر ننکانہ صاحب راجہ منصور احمد کی خصوصی ہدایت پر دوسرے اضلاع میں گندم کی منتقلی روکنے کے لیے ضلع بھر کی تمام شاہراوں پر ناکہ جات لگائے گئے ہیں اور ناکہ جات پر گندم دوسرے اضلاع میں منتقل کرنے والوں کے خلاف کارروائیاں جاری ہیں۔ گزشتہ روز محکمہ خوراک اور اسسٹنٹ کمشنرز کے عملے نے انتظامیہ کی جانب سے لگائے گے ناکہ جات شاہ کوٹ،سانگلہ ہل،مڑھ بلوچاں پر کاروائیاں کرتے ہوئے فوڈ سٹف ایکٹ کی خلاف ورزی کرنے اور گندم کی دوسرے اضلاع میں منتقلی کرنے والے ٹرک اور ٹرالیوں کو پکڑ کر محکمہ خوران نے گندم اپنے قبضہ میں لے کر خریداری مراکز پر ان لوڈ کردی۔ اس موقع پر ڈپٹی کمشنر راجہ منصور احمد نے کہا کہ گندم کی ذخیرہ اندوزی اور منتقلی کرنا سنگین جرم ہے،خلاف ورزی کرنے والوں کو ہرگز معاف نہیں کیا جاسکتا۔انہوں نے بتایا کہ ضلع بھر کے آوٹ پوائنٹس پر گندم کی منتقلی روکنے کے لیے ناکہ جات لگائے گئے ہیں ضلع ننکانہ صاحب کے لیے ایک لاکھ پانچ ہزار میٹرک ٹن کی خریداری کے ٹارگٹ کو ہر صورت مکمل کریں گے،جب تک ٹارگٹ مکمل نہیں ہو جاتا تب تک ٹاوٹ مافیا،نام نہاد آڑھتی سسٹم،ملزمالکان گندم خریداری عمل پر اثر انداز نہ ہوں،گندم خریداری کا عمل مزید 24 روز تک جاری رہے گا جبکہ دوسرے اضلاع میں گندم کی منتقلی کرنے سے پہلے محکمہ خوراک سے این او سی لینا ضروری ہو گا،انتظامیہ سے اجازت لیے بغیر دوسرے اضلاع میں منتقل کی جانے والی گندم ضبط کر لی جائے گی۔

Please follow and like us:
0

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Social media & sharing icons powered by UltimatelySocial